اعتراض : دعا مانگنے والوں کی قبول نہیں ہوتی اورنا مانگنے والے کافر مزے کرتے ہیں

اعتراض : یہ عجیب ہے کہ جو لوگ اسکی عبادت کریں انکی تو دعا بھی قبول نا ہو اور جو اسکا انکار کریں ، کفر کریں وہ دن رات مزے میں ہوں ۔ یہ اعتراض ایسے بھی کیا جاتا ہے کہ نیک لوگ مصیبت میں ہوں اور بدکار کافر عیاشیوں میں ۔۔ جواب : اعتراض…

پرابلم آف ایول یا دنیا میں برائی/ناانصافی/ظلم کا مسئلہ

خدا کے وجود پر شک کرنے کے لیے جو باتیں کہی جاتی ہیں ، ان میں سے ایک وه ہے جس کو پرابلم آف ایول (problem of evil) یا سفرنگ )suffering(کہا جاتا ہے – یہ اعتراض صرف ایک غلط فہمی کا نتیجہ ہے وه یہ کہ انسانی زندگی میں جو سفرنگ ہےوه تمام تر مین…

دنیا میں قحط، بھوک، ظلم کا ذمہ دار’جدید انسان”

سرمایہ داری اور جدید بنیادی حقوق کے فلسفے نے ایک حاسد حریص لالچی مریض پید ا کیا ہے جس کا خدا اور نبی صرف پیسہ [Capital] ہے ۔ یہ طالب لذات جانور ہے لہٰذا لذتوں میں اضافہ کے لئے اسے ہر وقت، مسلسل ہر لمحے سرمایہ کی ضرورت ہے .مغربی فلسفے اور سائنس و ٹیکنالوجی…

قربانی عید اور ملحدین کی جاندار دوست خودنمائیاں

اگر ملحدین ویجی ٹیریئن ہیں سبزی خور ہیں تو یاد رہے سبزی بھی لیونگ تھنگز میں آتی ہے _ آج سائینس خود کہہ رہی انسان اور جانور کی طرح پودے درخت بھی جزبات رکھتے ہیں ، کمیونکیٹ کرتے ہیں ، سانس لیتے ہیں ، ماحول کا اثر لیتے ہیں ، حساس ہوتے ہیں ، احساس…

جانوروں کی قربانی اور رحم-ایک مکالمہ

آج سکول سے واپسی پر گھر آتے ہوئے ملحدہ خالہ حمیداں پر نظر پڑی، وہ اپنے کھیتوں میں بیٹھی کچھ پریشان سی نظر آرہی تھی____ خالہ خمیدان کو پریشان دیکھ کر مجھے بھی اداسی لاحق ہو گئی __ مجھ سے رہا نا گیا چانچہ اپنی بھانجی ایمان کو ساتھ لئے خالہ حمیداں کے پاس جا…

لبیک اللھم لبیک۔۔۔

میں نفس کے اندھے کنوئیں کو دنیا کے لذیذ سروراور لوازمات سے بھرتا رہتا ہوں. یہ دنیا بڑی رنگین ہے، لبھاتی ہوئی اوراکساتی ہوئی. اور میرا نفس اس چھوٹے سے بچے کی مانند … جو خود پسند ہوتا ہے. جسے اپنی چاہت دنیا کی سب سے بڑی سچائی معلوم ہوتی ہے. بہلانے سے بہلتا نہیں…

ایک گمراہی-سائنس اور اسلام ایک ہی حقیقت کی تلاش میں ہیں۔۔

سائیٹ پر  مذہب اور سائنس کے تعلق سے پیش کی گئی کئی تحاریر سے یہ واضح ہے کہ مذہب اور سائنس کا جو ٹکراو ملحدین دکھلاتے ہیں اسکی کوئی حقیقت نہیں، دونوں کا میدان اور دائرہ کار الگ ہے، ایک مشاہدات کی اور دوسرا غیب کی دنیا کا شہسوار ہے۔۔ اس تحریر میں  ہم ایک دوسری…

سائنسی تصور علم (Scientific Method of Knowledge)-خلاصہ

گزشتہ تحریر میں ہم نے سائنسی طریقہ علم [scientific method of knowledge]کی وہ تشریحات و توجیہات جو مغربی مفکرین نے پیش کی ہیں اس کی ایک تلخیص پیش کرنے کی کوشش کی تھی۔یہاں ہم برسبیل تذکرہ ایک جامع خلاصہ بیان کیے دیتے ہیں۔ اس ساری تفصیل کے مطابق سائنس کے چار بڑے فرقے ہیں یعنی اس…

سائنسی طریقہ علم کیا ہے؟

استقرائی منطق کیا ہے؟ مغربی سائنس کیا ہے ؟ اس سوال کا جواب انتہائی اہمیت کا حامل ہے اس لیے نہیں کہ اس کا جواب اب تک تلاش نہیں کیا جاسکا بلکہ اس لیے کہ ہم میں سے اکثر و بیشتر لوگ اس کے جواب سے واقف نہیں۔ آج بھی ہمارے مفکرین اس غلط فہمی…

مسئلہ ارتداد اعتراضات :اگردوسرے مذاہب والے بھی ایسا کردیں

    کچھ سطحی النظر متجددین مرتد کی سزا کے خلاف یہ دلیل بھی دیتے ہیں کہ اگر دوسرے ادیان بھی اسی طرح اپنے دائرے سے باہر جانے والوں کے لیے سزائے موت کا قانون مقرر کر دیں جس طرح اسلام نے کیا ہے. تو یہ چیز اسلام کی تبلیغ کے راستے میں بھی ویسی…

قرآن معجزاتی ناکہ سائنسی کتاب

قرآن کی” بعض “کی معجزاتی حیثیت کی بنیاد پر قرآن کی’ ’کُل“ پر ایمان کی دعوت کوئی منطق کے استقرائی طریقہ کار کے تحت نہیں ہوتی (کہ جس میں حتی الامکان تمام اجزاءکو الگ الگ انفرادی طور پر ثابت کرکے پھر انکے مجموعے یا کُل کا اثبات ممکن بنایا جاتا ہے )بلکہ صرف چند حقائق…

سائنس اور غیبی حقائق-چند ضروری باتیں

سائنس کی منہاج(Paradigm) مظاہرکائنات سے علاقہ رکھتی ہے۔ کائنات میں ہمہ وقت جاری وساری اَن گنت واقعات وامور میں ارادۂ الٰہی نے اگر کچھ موزو نیت اور اصول پنہاں کررکھے ہیں تب تو یہ دنیا ایک بامعنی اور بامقصد جہان ہے ، وگرنہ محض تو ہّم کاکارخانہ ۔ لیکن جبکہ ایسا نہیں ہے، یعنی حقیقتاً…

حقیقت مطلقہ (Absolute Reality) وحی اور عقل

اشیاء اور مطاہر کائنات کی حقیقت – دو انتہائیں عالم مادّہ اور اس میں جاری وساری مظاہروواقعات کی حقیقت وکنہ کی بابت فلاسفہ وحکماءکی دومخالف اپروچز کا تذکرہ یہاں ضروری ہے ، جودرحقیقت اس معاملے کی دو انتہائیں ہیں۔ تفریط پر واقع انتہا اس نقطہ نظر کی حامل ہے کہ اشیاءاور مظاہر کائنات جس طرح…

معقولیت(rationality)انسانی فطرت کا لازمی جزو..

بدیہیات اور مسلمات کا اختیار کیا جانا اور چیزوں کا مسلّمہ معیارات کے مطابق پرکھاجانا ایسی چیز نہیں جو انسان کے اندر ”ماحول کے بگاڑ“ یا ”چار سُو پھیلی گمراہیوں“ کی وجہ سے دَر آتی ہو۔ یہ ایک لازمی وصفِ انسانی ہے ، خواہ انسان تاریخ کے کسی دور او رتمدن وترقی کے کسی درجے…