جہاد کے نام پر تخریب کاری کرنیوالوں کےموقف کاعلمی جائزہ

۔ جیسا کہ ہم گزشتہ کچھ تحاریر میں تفصیل پیش کرچکے ہیں کہ جو بھی ان مسلم تشدد پسند تکفیری تنظیموں کا جائزہ لے گا جو آج دنیا میں قائم ہیں ، وہ دیکھے گا کہ ان کا مخصوص فلسفہ،نقطہ نظر اور فقہ ہے جس کا یہ اپنے لئے دعویٰ کرتی ہیں اور قرآن و…

مقاتلین(سپاہی) اورغیرمقاتلین میں تمیزکامسئلہ

مسلمان اہلِ علم کااس بات پر اصولاََ اتفاق ہےکہ غیر مقاتلین کو جنگ میں نشانہ نہیں بنایاجائےگا۔اس بات پر بھی اتفاق ہے کہ غیر مقاتلین جنگ میں حصہ لیں تو نشانہ بنایا جاسکتا ہے ، لیکن عصرِ حاضر کے تناظر میں چند امور ایسے ہیں جن پراختلاف پایاجاتاہے،جومزید غوروفکرکے متقاضی ہیں: اولاََ:غیر مقاتلین میں کون…

کیاتمام ٹیکس دہندگان مقاتلین (جنگ لڑنےوالے)شمارہونگے ؟

عموما جنگ میں براہ راست حصہ لینے والوں کو مقاتلین شمار کیا جاتا ہے ، یہاں یہ سوال پیدا ہوتاہے کہ” جنگ میں براہِ راست حصہ لینے”سےکیا مراد ہے؟بعض لوگوں کی جانب سے یہ رائے سامنےآئی ہےکہ چونکہ فوج کےاخراجات ان ٹیکسوں سے پورے کئے جاتے ہیں جو حکومت اپنے شہریوں پرلگاتی ہے اس لیےہروہ…

جنگ میں براہ راست اور بالواسطہ حصہ لینےوالےکاقتل

شریعت نے مباشراورمتسبب کے حکم میں فرق کیاہے اور یہ کہ شریعت کے قواعد کی رو سے فعل مباشر ہی کیطرف منسوب کیاجاتاہے،الا یہ کہ مباشر متسبب کے ہاتھ میں ایک آلےکی حیثیت رکھتاہوں۔ظاہرہےووٹرز یا ٹیکس دہندگان کویہ طاقت حاصل نہیں ہوتی کہ حکومت اور فوج کی حیثیت ان کے ہاتھ میں ایک آلے کی…

برائی کو روکنے کیلیے طاقت کا استعمال

اسلامی شریعت كی رو سے امر بالمعروف اور نہی عن المنكر انفرادی طور پر ہر مسلمان كا بھی فریضہ ہے اور اجتماعی طور پر مسلمانوں كے نظم اجتماعی كا، یا حكمران، كا بھی۔ چنانچہ انفرادی سطح پر ہر مسلمان پر اس كے دائرہٴ كار كے اندر لازم كیا گیا ہے كہ وہ اچھائی كی تلقین…

ظالم اورغاصب حکمران کیخلاف خروج کا مسئلہ

شرعاً یہ جائز نہیں ہے کہ کوئی غیرمسلم مسلمانوں کا حاکم ہو۔ اس کی قانونی وجوہات بالکل واضح ہیں۔ اسلامی قانون کا مسلمہ اصول یہ ہے کہ غیرمسلم کو مسلمانوں پر ولایت عامہ حاصل نہیں ہے، جبکہ امارت و قضاء کے لیے ولایت عامہ ضروری ہے۔ حدود اور قصاص کے معاملات میں غیر مسلم کی…

پاکستانی دستوراورحکمرانوں کی شرعی حیثیت

پاکستان دارالسلام ہے! پاکستان میں شامل علاقے یقیناًدارالاسلام کی تعریف پر پورا اترتے ہیں ۔یہاں کی آبادی کی غالب اکثریت مسلمان ہے ۔جنہوں نے باہمی معاہدے کے ذریعے یہ بھی طے کیا ہوا ہے کہ اس کا سربراہ مسلمان ہو گا ۔اگر بعض لوگوں کے خیال میں اس معاہدے کی بعض شقیں یا دیگر قوانین…

پاکستان میں نفادِاسلام کیلیےمسلح جدوجہدکاراستہ

کچھ عرصہ پہلے بعض عسکریت پسند گروہوں کی طرف سے اس مضمون کے بیانات اخبارات میں شائع ہوئے کہ حکومت پاکستان طالبان کے ساتھ مذاکرات کے لیے آئین کی بات کرتی ہے جبکہ ہم شریعت کی بات کرتے ہیں۔ اس سے یہ بات محسوس ہوتی ہے کہ بہت سے عسکریت پسند گروپوں کے نزدیک دستور…

داعش پرامام ابن تیمیہؒ کےفکری اثرات

کچھ عرصہ پہلے ایک فیس بک مفکر قاری حنیف ڈار صاحب نے اپنی ایک پوسٹ میں یہ دعوی کیا کہ داعش وغیرہ جیسی دہشت گرد جماعتوں پر امام ابن تیمیہ رحمہ اللہ کے گہرے فکری اثرات ہیں۔ امام ابن تیمیہ رحمہ اللہ بھی اپنی فکر میں خوارجی تھے اور یہ جماعتیں بھی خوارجی فکر کی…

تکفیری سوچ سےمزاحمت کی منصوبہ بندی

تکفیری سوچ سے مزاحمت کیسے کی جائے ؟کچھ عرصہ پہلے ایک عالم مولانا طلحہ السیف( جوپاکستان کی ایک مستند و معروف جہادی تنظیم سے تعلق رکھتے ہیں) کا اس موضوع پر عمار خان ناصر (جو غامدی مکتبہ فکر سے بھی نسبت رکھتے ہیں )سے ایک مختصر مکالمہ ہوا، اسکو بعد میں مولانا نے اک الگ…

دار الاسلام اور دار الحرب کی تقسیم کس قانون اصول پر ہے؟

عصر حاضر میں اس موضوع پر کام کرنے والے اہل علم (الا ما شاء اللہ) بالعموم دو گروہوں میں تقسیم نظر آتے ہیں: ایک گروہ کے خیال میں دار الاسلام اور دار الحرب کی تقسیم قرآن و سنت کے نصوص پر مبنی نہیں تھی بلکہ یہ در اصل فقہاء کے دور کے بین الاقوامی نظام…

خودکش حملوں کی شرعی حیثیت

اگر حالت ِجنگ میں خود کش حملوں میں تین شرائط پوری کی جائیں تو ان کو بین الاقوامی قانون کی رو سے ناجائز نہیں کہا جاتا یا جائے گا:اولاً: یہ کہ حملہ کرنے والا مقاتل ہو۔ثانیاً: یہ کہ حملے کا ہدف فریق مخالف کے مقاتلین ہوں۔ثالثاً: یہ کہ حملے میں ایسا طریقہ یا ہتھیار استعمال…

اذنِ امام کی شرط اور جہادی تنظیموں کی شرعی حیثیت

جاوید احمد غامدی صاحب کے نزدیک جہاد کا اعلان ہر حال میں صرف ایک مسلم حکومت ہی کر سکتی ہے، دفاعی جہاد امام/حاکم کی اجازت کے بغیر جائز نہیں ،اس سلسلے میں وہ کسی پرائیویٹ جہادی تنظیم کی شرعی حیثیت کے قائل نہیں۔ جہاد کے لیے امام کی اجازت کی شرط ، جہادی تنظیموں کی…

سرکاری مشینری اور غیر مذہبی سیکٹر کیلیے

یہ بہرحال انصاف نہیں کہ یہاں کے سرکاری کارندوں کو مسلم مفاد اور مسلم خون کی حرمت سے متعلق خبردار ہی نہ کیا جائے..مستقبل کا علم سوائے اللہ کے کسی کو نہیں۔ ہم ہر مسلم خطے کی خیر وعافیت کیلئے صبح شام اللہ سے دعا کرتے ہیں اور آئندہ دنوں کیلئے بے حد پر امید…

نفادِشریعت-کیا،کیوں اور کیسے؟

آج کا موضوع ہمارے لیے ایک تقدیری اہمیت کا حامل ہے۔ یعنی اس موضوع کے جو گوشے اور جو پہلو سوالات کی صورت میں اظہارِ خیال کے لیے منتخب کیے گئے ہیں اُن کے بارے میں اپنا ذہن واضح کئے بغیر ہم موجودہ تاریخ کی جاری معاندانہ یلغار کے سامنے خود کو ثابت قدم نہیں…

نت نئی اصطلاحات/تحریکوں/دعوتوں کاظہور-نوجوانوں کیلیےالرٹ

٭مفہومات کی جنگ war of concepts: تسمیات labels کا معاملہ سیاسی پہلوؤں سے حد درجہ حساس ہے۔ بڑے بڑے دوررس مقاصد محض لیبلز لگا کر حاصل کر لئے جاتے ہیں۔ ’دہشت گردی‘ کا لفظ اِس حقیقت پر ایک نہایت واضح مثال ہے۔ جس فریق کے ہاتھ میں میڈیا کی طاقت ہوگی وہ دوسرے کا ستیاناس…