”علل و معلول” (causation) کی حقیقت

اٹھاریوں و انیسویں صدی کی الحادی سائنس (خصوصا فزکس) سے دماغ کچھ یوں مبہوت ھوئے کہ بڑے بڑے ذہین مسلمان بھی اس کے سامنے سرنگوں دکھائی دئیے۔ اسی کے زیر اثر سرسید جیسوں نے قرآن کے بیان کردہ معجزات کی ایسی مادی تشریحات پیش کیں جن سے انکا معجزاتی پہلو معدوم ھوکر رہ گیا۔ اس…

”آبادی کا مسئلہ” اور جدید مذھبی اجتہادات

ایک این جی او کے تحت ”بڑھتی ھوئی آبادی کے مسائل” پر کانفرنس کے سیشن کے دوران اظہار خیال کرتے ھوئے ایک عالم دین نے ”فیملی پلاننگ کے شرعی جواز” کے دلائل فرھم کئے (عزل والی احادیث کی بنیاد پر)۔ ایک دوسرے صاحب نے تجدد پسندانہ افکار کو سپورٹ کرتے ھوئے فرمایا کہ اب روایت…

اسلام اور تھیوکریسی (ملائیت)

جمہوری نظرئیے کے اثرات کے تحت جدید ذھن کے یہاں گویا یہ ایک ثابت شدہ امر ھے کہ ”اسلام میں ملائیت نہیں” ۔۔۔۔۔ یعنی ‘اسلام میں کسی مذہبی گروہ کی اجارہ داری نہیں، اسلام میں کوئی مذہبی طبقہ فیصلے کرنے کا حقدار نہیں’ وغیرہ وغیرہ۔ جمہوریت پسند مفکرین کے اس جملے کے پیچھے یہ مفروضہ…

خدا کو کس نے پیدا کیا۔ ۔؟

سوال خ عموما اس طور پر اٹھایا جاتا ھے کہ ” اگر ھر چیز کو خدا نے وجود بخشا ھے تو خدا کو کس نے پیدا کیا؟” یہ سوال ایک کیٹیگری مسٹیک (category mistake) ھے۔ تفصیل اسکی یہ کہ ھر وجود کو “ڈیفائن کرنے والی صفات” اس سے متعلق بعض ایسے سوالات کو غیر متعلق…

تعدد ازواج پر ایک جدیدیت زدہ کا اعتراض

ایک جدیدیت زدہ صاحب کہنے لگے کہ ”تعدد ازواج کی بات کرنے والے روایت پسند مذہبی لوگ عورت کے جذبات کی قدر ہی نہیں کرتے کیونکہ عورت انکے نزدیک انسان نہیں بلکہ مرد کے استعمال کی ایک چیز ھے۔ یہی وجہ ھے کہ یہ لوگ دوسری شادی کی وجہ سے پہلی بیوی کی پہنچنے والی…

دوسری شادی اور عدل

عورتوں کے حقوق کی آواز بلند کرنے والے جدید مفکرین کہتے ہیں کہ مشاھدے کے مطابق دوسری شادی کے بعد مرد عموما عدل نہیں کرتے لہذا دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی سے قانونی اجازت لینا ضروری ھونا چاھئے تاکہ عورت ظلم کا شکار نہ ھو۔ اگر یہی منطق ٹھری تو پھر دوسری شادی ہی کیا،…