مغالطہ :سیکولرازم لادینی نہیں کثیرالمذہبی نظام ہے

برادر سید متین نے پروفیسر امجد علی شاکر صاحب کے ایک اقتباس کی روشنی میں سوال اٹھایا ہے کہ سیکولر ریاست کا معنی کیا ہوتا ہے؟ پروفیسر صاحب فرماتے ہیں کہ مولانا مودودی نے سیکولرازم کا ترجمہ “لادینی” کیا ہے تو یہ درست نہیں بلکہ سیکولرازم کا معنی “ہمہ دینی یا کثیر مذہبی” ہوتا ہے۔…

مغالطہ:کون سا اِسلام جناب؟مولوی لڑتے ہیں ہم لڑتے نہیں

1. کون سا اِسلام جناب، کیونکہ مولویوں کا اسلامی احکامات کی تشریح میں اختلاف ہے، لٰہذا جب تک یہ اختلاف ختم نہیں ہوجاتے،اسلام کو اجتماعی نظم سے باہر رکھو۔ 2. ٹھیک ہے اختلافات ہمارے درمیان بھی ہیں،مگر ہم لڑتے تو نہیں نا، مولوی تو لڑتے ہیں،ایک دوسرے کو کافر وگمراہ کہتے ہیں۔ 3. عقل پر…

مغالطہ: کونسی شریعت ؟

سیکولرز کا پیش کردہ اشکال: کونسی شریعت شریعت شریعت تو سب کرتے ہیں۔ مگر اِن داعیانِ شریعت میں سے آج تک کوئی یہ نہیں بتا سکا کہ کونسی شریعت؟ کوئی ایک شریعت ہو تو بات کریں۔ یہاں خمینی کی شریعت ہے۔ نمیری کی شریعت ہے۔ ضیاءالحق کی شریعت ہے۔ قذافی کی شریعت الگ ہے۔ سعودیہ…

مغالطہ:عقل پرمبنی سیکولرنظام متشدد نہیں ہوتا!

 ٭عقل پر مبنی اجتماعی نظم ڈاگمیٹک نہیں ہوتا جب ان باتوں کا جواب نہیں بنتا تو عقل پرست و سیکولر لوگ ایک نئے قسم کا داؤ پیچ کھیلتے ہیں اور وہ یہ کہ ‘مذہبی عقیدہ چونکہ معین،غیر متبدل وآفاقی ہونے کا مدعی ہوتا ہے لٰہذا یہ اپنے ماننے والوں میں ڈاگمیٹک (متشدد) رویے کو فروغ…

مغالطہ:سیکولر ریاست کسی تصورخیر کی بیخ کنی نہیں کرتی

گزشتہ بحث کےبعد یہ غلط فہمی خودبخود صاف ہوجانی چاہیئے کیونکہ اپنے دائرہ عمل میں سیکولر ریاست صرف انہی تصورات خیر اور حقوق کو برداشت کرتی ہے جو اسکے اپنے تصور خیر (ہیومن رائٹس،یعنی ہیومن کی آزادی) سے متصادم نہ ہوں، اور ایسے تصورات خیر جو ہیومن رائٹس سے متصادم ہوں انکی بذریعہ قوت بیخ…

مغالطہ:سیکولرریاست پرامن مذہبی بقائے باہمی ممکن بناتی ہے

اس ضمن میں سیکولر لوگ بڑے طمطراق سے یہ بھی کہتے ہیں کہ سیکولر ریاست مذہبی اختلافات (مثلاً شیعہ،سنی،دیوبندی،بریلوی) کو ختم کرکے انکے پرامن بقائے باہمی کوممکن بناتی ہے، اور ہمارے چند دینی لوگ بھی اس جھانسے کاشکار ہوکر اسے سیکولر ریاست کی کوئی ‘خوبی’ اور اہل مذہب پر اس کا کوئی’احسان’ تصور کرنے لگتےہیں۔…

سیکولرمغالطہ-سیکولر ریاست فرد کی ذاتی زندگی میں مداخلت نہیں کرتی

سیکولر لوگوں کی پھیلائی ھوئی بہت سی مغالطہ انگیزیوں میں سے ایک یہ بھی ھے کہ ”سیکولر ریاست مذہبی ریاست کی طرح فرد کی ذاتی زندگی میں مداخلت نہیں کرتی، لہذا یہ مذہبی ریاست کی طرح جابرانہ (coercive) نہیں ھوتی۔ پس ریاست کو مذہبی نہیں بلکہ سیکولر بنیاد پر قائم ھونا چاھئے”۔ مگر حقیقت یہ…

ذاتی زندگی میں عدم مداخلت کےلبرل اصول کاتجزیہ

لبرل ریاستوں کا موجودہ پالیسی فریم ورک علم معاشیات کے مباحث سے ماخوذ ہے۔ معاشیات کی کتب لکھنے والے مصنفین بظاہر اپنے قاری کو یہ تاثر دیتے ہیں کہ ’’ریاست کو کیوں نجی سیکٹر کے معاملات میں مداخلت نہیں کرنا چاہیے‘‘ ۔ معاشیات میں گریجویشن کرنے والے عام طالب علم اور لبرل سیاسی فکر کا…

مسلم دنیا میں جمہوریت کا کھیل !

ترکی کے صدر رجب طیب اردگان نے مصر میں مرسی کے صدر بننے سے پہلے کہا تھا کہ مغرب جمہوریت کی نئی تعریف کی کوششوں میں مصروف ہے اس لیے اگر اخوان المسلمون نے انتخابات جیت بھی لیے تو وہ برسرِ اقتدار نہیں آئے گی ۔ یہی ہوا نا صرف اخوان المسلمون کی منتخب جمہوری…

جمہوریت- عوام حاکمیت کا فریب

جدید تہذیب کی دلکش مگر پرفریب ترین اشیاء میں سے سب سے بڑی جمہوریت ھے جو عوام کو یہ سراب دکھاتی ھے کہ ”تمہارے ارد گرد جو کچھ ھورھا ھے یہ سب تمہاری ہی خواہشات اور مرضی کا اظہار و عکس ھے”۔ مگر فی الحقیقت ایسا کچھ بھی نہیں کیونکہ سرمایہ داری ایک نظام زندگی…

کس آیت میں لکھاہےکہ خلافت قائم کرناضروری ہے؟

یہ سوال پوچھتے پھرنا کہ “بتاؤ کس آیت میں لکھا ہے کہ خلافت قائم کرنا ضروری ہے” ظاہر کرتا ہے کہ سائل کو معاملے کی نوعیت کی خبر ہی نہیں۔ یہ سوال ہی باطل ہے۔ متعلقہ سوال یہ ہے کہ کیا اللہ تعالی نے جن حقوق و فرائض کو متعین کیا ہے ان کی ادائیگی…

خلافت کی شرعی حیثیت- چند منطقی مغالطوں کا جائزہ

خلافت کی ناگزیریت: فطری تقاضوں اور استطاعت کا مغالطہ ہماری تحریر “خلافت ناگزیر ہے” کے جواب میں احباب نے دلائل کی جو عمارت قائم کی ہے اس کا ایک ستون یہ ہے: “فطری تقاضوں (بشمول اجتماعی نظام کے قیام) کو فطرت تک ہی رکھنا چاھئے۔ فطری اور عقلی تقاضے بدیہات ہوتے ہیں۔ ان پر انسانوں…

نبی کے کام کی نوعیت

۔ وحی کا منصب یہ نہیں کہ انسانی عقل، فطرت یا اجتماعی شعور جہاں ٹھوکر کھا سکتا تھا اسنے وہاں ٹھیک اور غلط کی وضاحت کردی، ہرگز نہیں ۔۔۔۔۔۔۔۔ جن لوگوں نے وحی کا یہ منصب پہچانا انہوں نے اسکی اسکے منصب کے مطابق قدر نہ کی ۔۔۔۔۔۔۔۔۔ بلکہ وحی کا منصب ”اصلا اور ابتداء”…

قرآن کی سائنسی تفسیرات کےضمن میں ایک عام گمراہی

قرآن کی سائنسی تفسیر ات کے ضمن میں ایک عام گمراہی الفاظ قرآنی کی دور ازکار تاویلات کرکے فی زمانہ مروج سائنس کے ہر مشہور نظرئیے کو قرآن سے ثابت کرنے کی کوشش کرنا بھی شامل ہے ۔ اس سعی کے پیچھے یہ مفروضہ کارفرما ہے کہ قرآن مجید سے کسی سائنسی نظرئیے کا ثابت…

قرآن کی سائنسی تفاسیر – کیا دل بھی سوچتا ہے

ایک وقت ایسا بھی تھا کہ جب مغرب سے آنے والی خام سائنسی معلومات سے مرعوب ہو کر بعض لوگوں نے قرآن مجید کی واضح اور صریح تعلیمات کو ایسی ایسی تاویلات کی خراد پر چڑھا یا کہ خدا کی پناہ۔ چنانچہ جس زمانے میں نیوٹن کے ’میکانکی نظریہ کائینات‘ [Mechanical world view]کا غلغلہ عام…

اسلامک ماڈرنزم (مغربی اور اسلامی ڈسکورس میں مطابقت پیدا کرنے) کی فکری بنیادیں

یورپ میں جدید الحادی (یعنی تنویری، بشمول سائنسٹفک) ڈسکورس اور عیسائی مذھب کی تاریخی کشمکش یہ بتاتی ھے کہ عیسائیت اس الحاد کے آگے شکست و ریخت کا شکار ھوگئ۔ البتہ جدید مسلم مفکرین نے جدید تنویری الحاد اور مذھب کی اس کشمکش کو ‘تنویری فکر بمقابلہ مذھب’ کے بجاۓ ‘تنویری فکر بمقابلہ عیسائیت’ سے…

اسلامک ماڈرنزم اور روژن ازم کا فرق

۔ مسلم ماڈرنزم کی بنیادی صفت ‘اجماع کا رد’ کرناہے،یعنی یہ حضرات تاریخی اسلامی علمیت کو رد کرتے ہیں۔چنانچہ ہر ماڈرنسٹ بااختلاف شدت یہ دعوی کرتا ہے کہ ‘آج تک کوئ اصل اسلام نہیں سمجھا’،اور پھر ان میں سے ہر ایک اسلام کی تعبیر و تشکیل نوع (reconstruction and reinterpretation)کا بیڑا اپنے سر اٹھاتا ہے۔انکی…

قرون اولی کی طرف مراجعت سے وحشت کی وجہ

آج اگر کسی سے کہا جائے کہ ”ھم قرون اولی کی طرف مراجعت چاھتے ہیں کہ یہی ھمارا آئیڈئیل ھے” تو اس تصور سے اسے وحشت ھونے لگتی ھے اور وہ اسے غیر عقلی و غیر فطری تصور کرتا ھے۔ اسکا مفروضہ یہ ھوتا ھے کہ زمانہ تبدیل ھوتا رھتا ھے اور یہ دعوی کرتے…